تازہ ترین
  • بریکنگ :- چیئرمین ایف بی آر ڈاکٹر اشفاق احمد کی صحافیوں سے غیر رسمی گفتگو
  • بریکنگ :- منی بجٹ تیارہوچکاہے، حکومت کہےگی توپیش کردیں گے،چیئرمین ایف بی آر
  • بریکنگ :- سیلز ٹیکس کی چھوٹ واپس لی جارہی ہے ، چیئرمین ایف بی آر
  • بریکنگ :- لگژری اشیاء کی درآمدات پر ٹیکس لگائے جائیں گے، چیئرمین ایف بی آر
  • بریکنگ :- درآمدی گاڑیوں پر اضافی ٹیکس کی سفارش ہے، چیئرمین ایف بی آر
  • بریکنگ :- کھانے پینے کی اشیاء اورادویات پر ٹیکس چھوٹ برقراررہےگی، چیئرمین ایف بی آر

بلوچ سیاسی رہنماؤں کا مسلم لیگ ن میں شمولیت کا امکان

Published On 21 August,2021 06:27 pm

لاہور: (دنیا نیوز) بلوچستان سے متعدد بلوچ سیاسی رہنماؤں کی پاکستان مسلم لیگ ن میں شمولیت کا امکان ہے۔

پاکستان مسلم لیگ ن کے صدر میاں شہباز شریف کی صدارت میں بلوچستان میں پارٹی صورتحال سے متعلق اہم ملاقات ہوئی، ملاقات کے دوران خواجہ سعد رفیق، سردار ایاز صادق، جمال کاکڑ اور سنیر رہنماؤں نے شرکت کی۔

ملاقات میں مسلم لیگ ن بلوچستان کے قائم مقام صدر جمال شاہ کاکڑ نے اپنی رپورٹ پیش کی جبکہ بلوچستان میں نواب ثناءاللہ زہری عبد القیوم بلوچ سمیت لیگی رہنماؤں کی جماعت سے علیحدگی کے بعد کی صورتحال پر غور کیا گیا، ملاقات میں پی ڈی ایم کی تحریک اور آئندہ کی سیاسی حکمت عملی کا بھی جائزہ لیا گیا۔

قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر نے جلد بلوچستان کا دورہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے، جس کے بعد مسلم لیگ ن میں بڑے پیمانے پر بلوچ سیاسی رہنماؤں کی شمولیت کا امکان ہے۔

شہباز شریف نے وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ن لیگ کے قائد کا بیانیہ ہر صوبے میں مضبوط اور مقبول ہو چکا ہے، ن لیگ نے عوامی خدمت کے ریکارڈ کام کیے، اس ناکام حکومت کی تین سالہ کارکردگی صفر ہے۔ بلوچستان سمیت ملک بھر میں نون لیگ کی مقبولیت کی وجہ نون لیگ کے خوشحال پاکستان ویثرن اور ترقی کا سفر ہے۔