تازہ ترین
  • بریکنگ :- ایم پی اےصداقت حسین پرتشددکاحساب لیا جائے گا،خالدمقبول صدیقی
  • بریکنگ :- ہماری ماؤں،بہنوں پرڈنڈے برسائے گئے،خالدمقبول صدیقی
  • بریکنگ :- وزیراعلیٰ استعفیٰ دیں ورنہ شہرکےدروازےبندکردیں گے،خالدمقبول صدیقی
  • بریکنگ :- ہم پاکستان کی بقا کی جنگ لڑرہے ہیں،خالدمقبول صدیقی
  • بریکنگ :- وزیراعظم کو فوری کراچی آنا چاہیے،خالدمقبول صدیقی
  • بریکنگ :- وزیراعظم آئی جی اورڈی آئی جی کومعطل کریں،خالدمقبول صدیقی
  • بریکنگ :- ہم جمہوریت کوواحد راستہ سمجھتےہیں،خالدمقبول صدیقی
  • بریکنگ :- پیپلزپارٹی نے ہمیں دوبارہ للکارا ہے،خالدمقبول صدیقی
  • بریکنگ :- ڈاکو کراچی پر مسلط ہیں،رہنما ایم کیو ایم خالدمقبول صدیقی
  • بریکنگ :- ایم کیو ایم پاکستان کا کل یوم سیاہ منانے کا اعلان
  • بریکنگ :- ایم کیو ایم کا وزیراعلیٰ سندھ سے استعفے کا مطالبہ

مفاہمت تو دور کی بات، حکومت سے بات بھی نہیں کی جانی چاہیئے: مریم نواز

Published On 01 September,2021 12:59 pm

اسلام آباد: (دنیا نیوز) مریم نواز نے کہا ہے کہ مفاہمت تو دور کی بات، حکومت سے بات بھی نہیں کی جانی چاہیئے، حکومت سچ بولنے والوں سے ڈرتی ہے۔

پاکستان مسلم لیگ نون کی نائب صدر مریم نواز نے اسلام آباد ہائیکورٹ کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ حکومت نے عوام دشمنی کی مثال قائم کر دی، کوشش ہے اگلے الیکشن میں حکومت کے کرپشن پلان کو روکا جائے، حکومت کی کارکردگی کو تباہی کہنا چاہیئے، ملکی تاریخ میں اتنی نااہل حکومت کبھی نہیں آئی، کس نے کس کا وقت ضائع کیا سب کے سامنے ہے۔

مریم نواز کا کہنا تھا کہ میرا ایک ہی بیٹا ہے اور اس کے نکاح میں شرکت کیلئے نہیں جاسکی، بیٹے کے نکاح میں جانے کی اجازت مانگی نہ مانگ سکتی ہوں۔ انہوں نے کہا کہ ساڑھے 3 سال میں کسی نے یہ خبر سنی کہ چینی، آٹا سستا ہوگیا ؟ یہ مسلط کی گئی حکومت ہے، یہ احتساب نہیں، انتقام ہے، حکومتی انتقام کے سامنے پیش ہونا کوئی عقلمندی نہیں ہے، ریگولیٹری اتھارٹی بل میڈیا کی زبان بندی کا تسلسل ہے۔