تازہ ترین
  • بریکنگ :- موٹروےایم 3فیض پورسےدرخانہ تک دھندکےباعث بند
  • بریکنگ :- موٹروےایم 4 باہوانٹرچینج سےٹوبہ اورگوجرہ انٹرچینج تک بند

فضل الرحمن کا عباسی سے رابطہ، اصلاحات کمیٹی سے متعلق خدشات کا اظہار، شدید احتجاج

Published On 23 September,2021 09:52 pm

اسلام آباد: (دنیا نیوز) پاکستان ڈیمو کریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) کے سربراہ اور امیر جمعیت علمائے اسلام (ف) مولانا فضل الرحمان نے پاکستان مسلم لیگ ن کے سینئر رہنما شاہد خاقان عباسی سے رابطہ کیا ہے اوراصلاحات کمیٹی سے متعلق خدشات کا اظہار اور مسلم لیگ ن کیساتھ شدید احتجاج کیا ہے۔

پاکستان ڈیمو کریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے لیگی رہنما شاہد خاقان عباسی سے رابطہ کیا ہے۔

ذرائع کے مطابق رابطے کے دوران مولانا نے ن لیگ سے شدید احتجاج کیا اور انتخابی اصلاحات کمیٹی سے متعلق اپنے خدشات کا اظہار بھی کیا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ مولانا فضل الرحمان نے کہا جمعیت علمائے اسلام (ف) کسی بھی انتخابی اصلاحات کمیٹی کا حصہ نہیں ہوگی اور نہ ہی کسی پلیٹ فارم پر عمران خان کی حکومت کے ساتھ نہیں بیٹھے گی۔

اپنی بات کو جاری رکھتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ مسلم لیگ ن پی ڈی ایم کا حصہ ہے کسی بھی معاملہ پر پی ڈی ایم کو اعتماد میں لینا ہو گا۔

خیال رہے کہ پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کی وفاقی حکومت اور اپوزیشن نے انتخابی اصلاحات پر پارلیمانی کمیٹی بنانے کا فیصلہ کیا ہے۔

گزشتہ روز سپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر سے اپوزیشن اور حکومتی رہنماؤں کی ملاقات ہوئی جس میں شفقت محمود، پرویز خٹک، جے یو آئی کی رکن شاہدہ اختر، پی پی کے نوید قمر، (ن) لیگ کے مرتضیٰ جاوید عباسی اور رانا تنویر بھی شریک تھے۔

ملاقات میں مجوزہ انتخابی اصلاحات پر تبادلہ خیال کیا گیا جبکہ اس دوران انتخابی اصلاحات پر پارلیمانی کمیٹی کے قیام کا بھی فیصلہ کیا گیا۔

قومی اسمبلی سیکرٹریٹ کے اعلامیے میں کہا گیا ہےکہ پارلیمانی کمیٹی دونوں ایوانوں کے اراکین پر مشتمل ہوگی، کمیٹی بنانے کے لیے سینیٹ اور قومی اسمبلی میں علیحدہ علیحدہ تحاریک پیش ہوں گی جب کہ اسپیکر قومی اسمبلی پارلیمانی رہنماؤں کی مشاورت سے کمیٹی بنائیں گے۔ کمیٹی انتخابی اصلاحات کا جائزہ لے کر سفارشات پیش کرے گی۔