تازہ ترین
  • بریکنگ :- ضلعی انتظامیہ کےساتھ طبی سہولتوں کی فراہمی کیلئےسرگرم ہیں،آئی ایس پی آر
  • بریکنگ :- کورکمانڈربہاولپورنےکیمپوں میں دی گئی سہولتوں کاجائزہ لیا،آئی ایس پی آر
  • بریکنگ :- کورکمانڈرنےہدایت کی کہ زیادہ ترمریضوں کوطبی سہولتیں دی جائیں،آئی ایس پی آر
  • بریکنگ :- پاک آرمی کی چولستان کےدورافتادہ علاقوں میں مفت طبی سہولتیں،آئی ایس پی آر
  • بریکنگ :- منصوبےکوعملی جامہ پہنانے کیلئے پاک آرمی کی خصوصی ٹیمیں تشکیل،آئی ایس پی آر
  • بریکنگ :- 2021 میں چنن پیر،کھتری بنگلہ،دین گڑھ میں میڈیکل اورآئی کیمپ کاانعقادکیاگیا
  • بریکنگ :- چاہ ناگراں،چاہ ملکانہ میں میڈیکل اورآئی کیمپ کا انعقادکیاجاچکاہے،آئی ایس پی آر
  • بریکنگ :- کالاپہاڑ،احمدپورایسٹ، منچن آباد اور چشتیاں میں فری میڈیکل اورآئی کیمپ کا انعقادکیاگیا
  • بریکنگ :- 12 ہزارافراد کوفری طبی سہولیات مہیا کی جا چکی ہیں،آئی ایس پی آر
  • بریکنگ :- تحصیل اسپتال فورٹ عباس میں فری میڈیکل کیمپ 12سے 17 اکتوبرتک جاری ہے
  • بریکنگ :- 15 اکتوبر 2021کوکورکمانڈر بہاولپورنےآئی کیمپ کا دورہ کیا،آئی ایس پی آر

طالبان معاہدے کی پاسداری کر رہے ہیں، دیگر فریق بھی کریں: ملا برادر

Published On 18 March,2021 08:27 pm

ماسکو: (دنیا نیوز) افغان طالبان کے رہنما ملا برادر نے کہا ہے کہ ہم معاہدے کی پاسداری کر رہے ہیں، دیگر فریق بھی کریں، معاہدے پر من وعن عمل کیا گیا تو موجودہ تمام مسائل حل ہوسکتے ہیں۔

ملا برادر نے یہ بات ماسکو سمٹ میں اپنے خطاب میں کہی۔ ان کا کہنا تھا کہ طالبان نے آپریشن محدود کر دیے ہیں، تاہم دوسرے فریق معاہدے کی خلاف ورزی کر رہے ہیں۔

ماسکو سمٹ کے آغاز پر روسی وزیر خارجہ سرگئی لاروف نے اہم تقریر کی اور کہا کہ ہمیں افسوس ہے کہ دوحہ میں جاری امن مذاکرات کا اب تک کوئی نتیجہ نہیں نکلا۔ امید ہے روس میں جاری امن مذاکرات قیام امن کی جانب اہم قدم ثابت ہونگے۔ خیال رہے کہ افغان حکومت اور طالبان کے وفد ماسکو میں موجود ہیں جبکہ امریکا، پاکستان اور چین کے وفود بھی ماسکو سمٹ میں شریک ہیں۔

خیال رہے کہ گزشتہ روز امریکی صدر جوبائیڈن نے ایک انتہائی اہم بیان دیتے ہوئے کہا تھا کہ افغانستان سے یکم مئی تک امریکی فوجوں کا مکمل انخلا مشکل ہوگا۔

امریکی ٹی وی کو انٹرویو میں صدر جوبائیڈن کا کہنا تھا کہ افغانستان سے امریکی قیدیوں کا انخلا یکم مئی تک ممکن لیکن بہت مشکل ہوگا، ایسا ہوسکتا ہے لیکن یہ بہت مشکل ہے، انخلا کے وقت سے متعلق فیصلے پر کام کر رہے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں: افغانستان سے مکمل انخلاء مشکل: جوبائیڈن، نتائج بھگتنے کیلئے تیار ہو جاؤ: طالبان

جوبائیڈن کا کہنا تھا کہ سابق صدر نے اس پر بہت زیادہ ٹھوس انداز میں بات چیت نہیں کی، اقتدار کی ہموار منتقلی نہ ہونے کی وجہ سے اس مسئلے پر کام کرنے میں وقت لگا۔ افغانستان سے متعلق اس مسئلے پر ہم اب بات چیت کر رہے ہیں۔

دوسری طرف امریکی صدر جوزف بائیڈن کے اس فیصلے پر انتباہی انداز میں رد عمل دیتے ہوئے ترجمان طالبان ذبیح اللہ مجاہد کہا ہے کہ یکم مئی تک فوج نکالو، ورنہ نتائج بھگتنے کے لئے تیار ہوجاؤ۔

انہوں نے کہا کہ امریکا دوحہ معاہدے کے مطابق یکم مئی تک افغانستان پر قبضہ ختم کرے، فوج نہیں نکالی تو تمام نتائج کا ذمہ دار امریکا خود ہوگا۔