تازہ ترین
  • بریکنگ :- نیب ترامیم کوآج سپریم کورٹ میں چیلنج کردیاہے،عمران خان
  • بریکنگ :- ہمیں عدلیہ پراعتماد ہے وہ ظلم نہیں ہونےدے گی،عمران خان
  • بریکنگ :- اگریہ کامیاب ہوگئےتوپاکستان کوکسی دشمن کی ضرورت نہیں،عمران خان
  • بریکنگ :- یہ نیب ترامیم سےپاکستان کی تباہی کرنے جارہے ہیں،عمران خان
  • بریکنگ :- انہوں نے نیب ترامیم میں بڑےڈاکوؤں کوچھوٹ دےدی،عمران خان
  • بریکنگ :- نیب ترامیم کےبعد صرف چھوٹے چورپکڑےجائیں گے،عمران خان
  • بریکنگ :- انہوں نےاپنی چوری بچانےکیلئےاحتساب کےنظام کی قبرکھودی،عمران خان
  • بریکنگ :- چوری کےپیسےسےپراپرٹی خریدنےوالےکوکوئی پوچھ نہیں سکےگا،عمران خان
  • بریکنگ :- شہبازشریف کی 16ارب کی چوری پکڑی گئی ہے،عمران خان
  • بریکنگ :- ان کی بیرون ملک پراپرٹی کا اندازہ نہیں لگایا جاسکتا،عمران خان
  • بریکنگ :- ہرسال 1700ارب غریب ممالک سےآف شورکمپنیوں میں جاتاہے،عمران خان
  • بریکنگ :- ان پیسوں کےذریعےخریدےگئےفلیٹس میں نوازشریف رہتا ہے،عمران خان
  • بریکنگ :- لندن کمپنی کی مالکہ مریم نوازہیں،چیئرمین پی ٹی آئی عمران خان
  • بریکنگ :- اسلام آباد:لندن میں 4 مہنگےفلیٹس خریدے گئے،عمران خان
  • بریکنگ :- نیب ترامیم کےبعد ان فلیٹس کا پوچھانہیں جائےگا،عمران خان
  • بریکنگ :- ترامیم کے بعد نیب کو الزام ثابت کرناپڑےگا،عمران خان
  • بریکنگ :- نئےقانون کےبعد وائٹ کالرکرائم کوپکڑنا ناممکن ہوجائے گا،عمران خان
  • بریکنگ :- ملکی نظام پہلےہی ایساہےان لوگوں کوپکڑنااورسزادینامشکل ہے،عمران خان
  • بریکنگ :- ملک کی تباہی چھوٹےنہیں،بڑےچوروں کی وجہ سےہوتی ہے،عمران خان
  • بریکنگ :- انہوں نےخودکوبچانےکیلئےچوری کےدروازےکھول دیئےہیں،عمران خان

امریکی خفیہ ادارے نے چین پر نظر رکھنے کے لیے چائنا مشن قائم کر لیا

Published On 08 October,2021 09:13 am

واشنگٹن: (دنیا نیوز) امریکی خفیہ ادارے نے چین پر نظر رکھنے کے لیے چائنا مشن قائم کر لیا، چائنا مشن سینٹر کا مقصد چینی اثر و رسوخ کا مقابلہ کرنا ہے۔

امریکا کے معروف جریدے کے مطابق خفیہ ایجنسی سی آئی اے نے چین سے متعلق معاملات دیکھنے کے لیے اعلیٰ سطح کا خصوصی چائنا مشن سینٹر قائم کر دیا، سی آئی اے نے چین کو 21 ویں صدی میں امریکا کے لیے سب سے بڑا خطرہ قرار دیا ہے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق امریکی ایجنسی نے حالیہ دنوں میں چین میں اپنے ایجنٹس بھرتی کرنے کی کوششیں تیز کی ہیں، ایجنسی دنیا بھر سے چینی امور کے ماہرین کو بھی تعینات کرے گی۔