48 روز میں شہید فلسطینیوں کی تعداد 20 سالہ افغان جنگ سے زیادہ ہے: امریکی اخبار

Published On 26 November,2023 05:27 pm

نیویارک: (ویب ڈیسک) امریکی اخبار کے مطابق اسرائیلی فوج کے ہاتھوں 48 دن میں شہید فلسطینیوں کی تعداد امریکا کی 20 سالہ افغان جنگ سے زیادہ ہے۔

امریکی اخبار نیویارک ٹئمز کی رپورٹ کے مطابق اسرائیل نے غزہ میں 48 روز میں 20 سالہ افغان جنگ سے زیادہ شہریوں کا قتل کیا، غزہ جنگ کے پہلے دو ہفتوں میں اسرائیل کے غزہ پر برسائے گئے 90 فیصد بم ایک سے دو ہزار پونڈ وزنی تھے۔

رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ اسرائیل نے 7 ہفتے کے فضائی حملوں میں عراق جنگ کے پہلے ایک سال سے دگنی تعداد میں شہریوں کا قتل کیا، غزہ میں 48 دن میں شہریوں کی ہلاکتیں یوکرین جنگ میں 2 سال کی ہلاکتوں سے بھی زیادہ ہیں۔

یہ بھی پڑھیں: یرغمالیوں کی رہائی کا یہ مطلب نہیں کہ جنگ مکمل بند ہو جائے گی: نیتن یاہو

یاد رہے کہ 7 اکتوبر سے غزہ میں جاری اسرائیلی بمباری میں اب تک 14 ہزار 850 سے زائد فلسطینی شہید اور 36 ہزار سے زائد زخمی ہو چکے ہیں۔

حماس اور اسرائیل کے درمیان غزہ میں 4 روز کی عارضی جنگ بندی کا آج تیسرا روز ہے اور دونوں فریقین کی جانب سے معاہدے کے تحت ایک دوسرے کے قیدیوں کو رہا کیا جا رہا ہے۔ 

Advertisement