تازہ ترین
  • بریکنگ :- وزیراعظم شہبازشریف کی زیرصدارت اتحادیوں کااجلاس
  • بریکنگ :- فوری الیکشن کی تاریخ دینےکاعمران خان کامطالبہ مسترد،ذرائع
  • بریکنگ :- حکومت 2023 تک اپنی مدت پورےکرےگی،تمام جماعتوں کامتفقہ فیصلہ
  • بریکنگ :- تمام اتحادی جماعتوں نےوزیراعظم کےفیصلےکی توثیق کردی،ذرائع
  • بریکنگ :- اتحادیوں کاالیکشن سےقبل اصلاحات کاعمل جلدمکمل کرنےپرزور،ذرائع
  • بریکنگ :- وزیراعظم،اتحادیوں کامعیشت کی بحالی کیلئےفوری اقدامات کرنےکافیصلہ،ذرائع
  • بریکنگ :- اتحادیوں کی سیاسی بحران،معاشی استحکام کیلئےمکمل تعاون کی یقین دہانی
  • بریکنگ :- وزیراعظم نےروپےکی قدرمیں اضافےودیگرمعاشی امورپراعتمادمیں لیا
  • بریکنگ :- شرکانےعمران خان کی 4سالہ کارکردگی کی حقیقت عوام کےسامنےلانےپرزوردیا،ذرائع

حکومت کا 4 بجلی تقسیم کار کمپنیوں سے جان چھڑانے کا پلان

Published On 25 January,2021 12:52 pm

اسلام آباد: (دنیا نیوز) حکومت کیلئے بھاری خسارے کا شکار بجلی تقسیم کار کمپنیاں درد سر بن گئیں۔ حکومت نے 4 بجلی تقسیم کار کمپنیوں سے جان چھڑانے کا پلان بنالیا۔

ذرائع کے مطابق بجلی کی 4 تقسیم کار کمپنیاں صوبوں کے حوالے کرنے کا منصوبہ بنالیا۔ حیسکو اور سیپکو سندھ حکومت کو دینے پر غور شروع کر دیا۔ پیسکو اور ٹیسکو خیبر پختونخوا حکومت کو دینے کا منصوبہ ہے۔ پاور ڈویژن کا معاملہ مشترکہ مفادات کونسل میں لیکر جانے پر غور کیا جا رہا ہے۔

حکومتی ذرائع کے مطابق بجلی چوری، ترسیل اور تقسیم کے نقصانات بڑا مسئلہ ہے، بلوں کی عدم ادائیگی بھی ایک بڑا مسئلہ ہے، پشاور الیکٹرک سپلائی کمپنی کے سالانہ نقصانات 38.69 فیصد پر پہنچ گئے، سکھر الیکٹرک سپلائی کمپنی کے سالانہ نقصانات 36.27 فیصد پر پہنچ چکے، حیدر آباد الیکٹرک سپلائی کمپنی کے نقصانات 28.82 فیصد پر پہنچ گئے، ٹرائبل الیکٹرک سپلائی کمپنی کے نقصانات 16.19 فیصد ہیں۔