تازہ ترین
  • بریکنگ :- کوئی طاقتورجیلوں میں نظرنہیں آتا،وزیراعظم عمران خان
  • بریکنگ :- 3 بارکےوزیراعظم کےبچےبیرون ملک بیٹھےہیں ،وزیراعظم
  • بریکنگ :- میں ملک سے نہیں بھاگا،کیسز کاسامناکیا،وزیراعظم
  • بریکنگ :- کہاجاتاہے کہ میں شہبازشریف سے ہاتھ نہیں ملاتا،وزیراعظم
  • بریکنگ :- شہبازشریف کواپوزیشن لیڈرنہیں قومی مجرم سمجھتاہوں،وزیراعظم
  • بریکنگ :- شہبازشریف نے داماداوربیٹے کوملک سے فرارکرایا،وزیراعظم
  • بریکنگ :- شہبازشریف پارلیمنٹ میں 3،3 گھنٹےکی تقریریں کرتےہیں،وزیراعظم
  • بریکنگ :- شہبازشریف کی تقریر کم اورجاب کی درخواست زیادہ ہوتی ہے،وزیراعظم
  • بریکنگ :- مقصودچپڑاسی کےاکاؤنٹ میں 16 کروڑ روپے کیسے آگئے؟وزیراعظم
  • بریکنگ :- جب سوال پوچھاجائےتوکہتے ہیں بچےباہرہیں ان سے پوچھیں،وزیراعظم
  • بریکنگ :- شہبازشریف کیس کاروزانہ کی بنیادپرسن کرفیصلہ ہوناچاہیے،وزیراعظم
  • بریکنگ :- مجرموں سےمفاہمت کروں گاتو قوم سے غداری کروں گا،وزیراعظم
  • بریکنگ :- اپوزیشن کواین آراو نہیں دوں گا،وزیراعظم عمران خان

آئی ایم ایف کی کڑی شرط پر عملدرآمد، بیورو کریسی کے بیرون ملک اثاثوں کی تفصیلات طلب

Published On 13 July,2021 11:59 am

اسلام آباد: (دنیا نیوز) آئی ایم ایف کی کڑی شرط پر عملدرآمد کا آغاز کر دیا گیا اور تمام وزارتوں، ڈویژن اور محکموں کے اعلی افسران کو بیرون ملک اثاثوں کی مکمل تفصیلات ہر سال 31 جولائی تک جمع کرانا ہوں گی۔

اعلی سرکاری ملازمین کے لیے سختی، بیرون ملک کیا بنایا کیا چھپایا، سب بتانا ہوگا، ورنہ کارکردگی الاؤنس بند ہوجائے گا۔ آئی ایم ایف نے یہ مطالبہ عالمی انسداد بدعنوانی کے تحت کیا گیا ہے۔ بیورو کریسی کے بیرون ملکوں اثاثوں کی تفصیلات طلب کرلی ہیں۔ نئے مالی سال میں بیرون ملک اثاثے ظاہر کرنا ہوں گے۔ بیورو کریسی 31 جولائی تک اثاثہ جات کی مکمل تفصیلات جمع کرائیں۔

بیرون ملک منقولہ اور غیر منقولہ اثاثہ جات سے بھی آگاہ کیا جائے، بیرون ملک اثاثہ جات خفیہ رکھنے والے بیورو کریٹس کے خلاف کارروائی ہوگی۔ وزارتوں اور محکموں کے افسران 31 جولائی تک بیرون ممالک اثاثوں کی تفصیلات کے پابند ہوں گے اور معلومات نہ دینے کی صورت میں کارکردگی الائونس سے محروم ہونا پڑے گا۔