تازہ ترین
  • بریکنگ :- ملک بھرمیں کورونامریضوں کی تعداد 13لاکھ 81 ہزار 152 ہوگئی
  • بریکنگ :- ملک میں کوروناکےایکٹوکیسزکی تعداد 82 ہزار 396 ہوگئی،این سی اوسی
  • بریکنگ :- ملک بھرمیں 24 گھنٹےکےدوران کوروناسےمزید 17 اموات
  • بریکنگ :- ملک بھرمیں کوروناسےجاں بحق افرادکی تعداد 29 ہزار 122 ہوگئی
  • بریکنگ :- 24 گھنٹےمیں کوروناکے 556 مریض صحت یاب،این سی اوسی
  • بریکنگ :- کوروناسےصحت یاب افرادکی مجموعی تعداد 12 لاکھ 69 ہزار 634 ہوگئی
  • بریکنگ :- 24 گھنٹےکےدوران 49 ہزار 595 کوروناٹیسٹ کیےگئے،این سی اوسی
  • بریکنگ :- ملک بھرمیں 2 کروڑ 46 لاکھ 39 ہزار 942 کوروناٹیسٹ کیےجاچکے
  • بریکنگ :- کوروناسےمتاثر 1200 مریضوں کی حالت تشویشناک،این سی اوسی
  • بریکنگ :- پنجاب 4 لاکھ 66 ہزار 164،سندھ میں 5 لاکھ 29 ہزار 218 کیسز
  • بریکنگ :- خیبرپختونخواایک لاکھ 85 ہزار 683،بلوچستان میں 33 ہزار 975 کیس رپورٹ
  • بریکنگ :- اسلام آبادایک لاکھ 20 ہزار 128،گلگت بلتستان میں 10 ہزار 510 کیسز
  • بریکنگ :- آزادکشمیرمیں کورونامریضوں کی تعداد 35 ہزار 474 ہوگئی،این سی اوسی
  • بریکنگ :- ملک میں کورونامثبت کیسزکی شرح 12.81 فیصدرہی،این سی اوسی
  • بریکنگ :- 24 گھنٹےمیں کوروناکےمزید 6357 کیس رپورٹ،این سی اوسی

یوسف گیلانی کی اپوزیشن لیڈر کیلئےدرخواست سے پی ڈی ایم کو دھچکا لگا: احسن اقبال

Published On 26 March,2021 01:57 pm

لاہور: (دنیا نیوز) مسلم لیگ نون کے مرکزی رہنما احسن اقبال نے کہا ہے کہ یوسف گیلانی کی اپوزیشن لیڈر کیلئےدرخواست سے پی ڈی ایم کو دھچکا لگا، پیپلزپارٹی کیلئے سینیٹ کے اپوزیشن لیڈرکا عہدہ ناگزیر تھا تو نوازشریف کوبتاتے۔

لاہور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے احسن اقبال کا کہنا تھا کہ پی ڈی ایم جماعتوں نےاعظم نذیر تارڑ کی حمایت کا اعلان کیا، 27 سینیٹرز ان کی حمایت کرچکے ہیں۔ پی ڈی ایم کے مقاصد کے ساتھ بےوفائی کرنے والا بڑی قیمت ادا کرے گا۔ سینیٹ میں اپوزیشن لیڈر کا معاملہ پی ڈی ایم اجلاس میں رکھیں گے۔

انہوں نے کہا کہ عوام چاہتے ہیں 72 سال سےچلنے والا میوزیکل چیئرکا کھیل ختم ہو، پی ڈی ایم پاکستان کے 22 کروڑعوام کی امیدوں کا مرکز ہے۔ نیب قومی اداروں کیخلاف بیان پر ایکشن لےسکتا ہے، نیب ایس او پیز کی خلاف ورزی پروزیراعظم کونوٹس جاری کرے۔

واضح رہے کہ پاکستان پیپلز پارٹی کے سینیٹر یوسف رضا گیلانی نے ایوان بالا میں قائد حزب اختلاف بننے کیلئے درخواست آج ہی جمع کروائی ہے۔ ان کے قائد حزب اختلاف بننے کے لئے درخواست پر 30 سینیٹرز نے تحریری حمایت کے لئے دستخط کیے ہیں۔