تازہ ترین
  • بریکنگ :- گرفتارکرکےہمیں خوفزدہ کریں گےتویہ ان کی غلط فہمی ہے،شیریں مزاری
  • بریکنگ :- یہ جس طرح ملک کو تباہ کررہےہیں ناقابل قبول ہے،شیریں مزاری
  • بریکنگ :- چیف جسٹس ہائیکورٹ کی مشکورہوں جنہوں نےرہائی کاحکم دیا،شیریں مزاری
  • بریکنگ :- چیف جسٹس ایکشن نہ لیتےتوپتہ نہیں اسوقت میں کہاں ہوتی؟شیریں مزاری

بیورو کریسی کا راج ختم، 229 بلدیاتی نمائندوں، سربراہان سمیت 58ہزار بحال

Published On 18 October,2021 05:43 pm

لاہور: (دنیا نیوز) پنجاب میں بیورو کریسی کا راج ختم ہو گیا، 229بلدیاتی نمائندوں سربراہان سمیت 58ہزار بلدیاتی نمائندے بحال کر دیئے گئے۔ محکمہ بلدیات نے بلدیاتی اداروں اور ایڈمنسٹریٹرز کو دیئے گئے اختیارات کے تمام نوٹفکیشن واپس لے لئے جبکہ لوکل گورنمنٹس کے معاملات مئیرز چلائیں گے، 2013 بلدیاتی ایکٹ بحال کر دیا گیا۔ سیکریٹری بلدیات پنجاب نے نوٹفکیشن جاری کر دیا۔

وزیر اعلی پنجاب سردار عثمان بزدار کی زیر صدارت اعلی سطح کا اجلاس ہوا جس میں بلدیاتی اداروں کو فعال کرنے کے حوالے سے اہم فیصلہ کیا گیا۔ اجلاس میں صوبائی وزیر بلدیات محمود الرشید، ایڈووکیٹ جنرل پنجاب، پرنسپل سیکرٹری وزیر اعلی، سیکرٹری بلدیات اور متعلقہ حکام نے شرکت کی۔

وزیر اعلی نے بلدیاتی اداروں کو فعال کرنے کی منظوری دے دی اور فوری طور پر ایڈمنسٹریٹرز کو دستبردار کرنے کا فیصلہ کیا۔

عثمان بزدار نے محکمہ بلدیات کو آج ہی نوٹیفکیشن جاری کر نے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ بلدیاتی اداروں کو فعال کرنے کا فیصلہ کر لیا ہے، ہر اقدام آئین و قانون کی روشنی میں اٹھائیں گے۔

محکمہ بلدیات نے وزیراعلی کی ہدایت پر فی الفور عمل کرتے ہوئے بلدیاتی اداروں کو فعال کرنے اور ایڈمنسٹریٹرز کی دستبرداری کا نوٹیفکشن جاری کر دیا۔