تازہ ترین
  • بریکنگ :- وزیراعظم شہبازشریف کی زیرصدارت اتحادیوں کااجلاس
  • بریکنگ :- فوری الیکشن کی تاریخ دینےکاعمران خان کامطالبہ مسترد،ذرائع
  • بریکنگ :- حکومت 2023 تک اپنی مدت پورےکرےگی،تمام جماعتوں کامتفقہ فیصلہ
  • بریکنگ :- تمام اتحادی جماعتوں نےوزیراعظم کےفیصلےکی توثیق کردی،ذرائع
  • بریکنگ :- وزیراعظم نےروپےکی قدرمیں اضافےودیگرمعاشی امورپراعتمادمیں لیا
  • بریکنگ :- شرکانےعمران خان کی 4سالہ کارکردگی کی حقیقت عوام کےسامنےلانےپرزوردیا،ذرائع
  • بریکنگ :- اتحادیوں کاالیکشن سےقبل اصلاحات کاعمل جلدمکمل کرنےپرزور،ذرائع
  • بریکنگ :- وزیراعظم،اتحادیوں کامعیشت کی بحالی کیلئےفوری اقدامات کرنےکافیصلہ،ذرائع
  • بریکنگ :- اتحادیوں کی سیاسی بحران،معاشی استحکام کیلئےمکمل تعاون کی یقین دہانی

سابق چیف جج گلگت بلتستان کے انکشافات، مریم نواز کا رد عمل بھی آ گیا

Published On 15 November,2021 06:36 pm

لاہور: (ویب ڈیسک) پاکستان مسلم لیگ (ن) کی مرکزی نائب صدر مریم نواز کا سابق چیف جج گلگت بلتستان رانا شمیم کے انکشافات پر ردعمل آ گیا ہے۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر مریم نواز نے نواز شریف کی تصویر اور خبر کا تراشہ شیئر کیا جس پر قرآن کی آیت درج ہے۔

لیگی نائب صدر کا کہنا تھا کہ اس شخص سے ڈرنا چاہیے جو صبرکرے اور اپنا فیصلہ اللّہ پر چھوڑ دے۔ اس میں ظالموں کیلئے بہت بڑا سبق ہے۔

اس سے قبل مسلم لیگ (ن) کے صدر شہبازشریف نے ٹویٹرپر سابق چیف جج گلگت بلتستان سے متعلق خبر پر اپنے رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے بتایا کہ دھماکا خیز خبر سے مسلم لیگ ن کے قائد نوازشریف اور مریم نواز کو نشانہ بنانےکے پس پردہ بڑی سازش بےنقاب ہوگئی۔ سچائی منکشف کرنے کا اللہ تعالی کا اپنا طریقہ ہے اور اس سچائی کا ظاہرہونا عوام کی عدالت میں نوازشریف، مریم نواز کی بےگناہی کا ایک اور ثبوت ہے۔

دوسری جانب مریم اورنگزیب نے اپنے رد عمل میں کہا کہ پاکستان، عوام اور اس کے منتخب وزیراعظم نوازشریف کے خلاف گھناؤنی سازش اور اس میں ملوث کرداروں کو ایک ایک کرکے اللہ تعالیٰ بے نقاب فرما رہا ہے۔ سابق چیف جج گلگت بلتستان کا یہ مصدقہ حلف نامہ اس مذموم جرم کے خلاف گواہی ہے۔

خیال رہے کہ سابق چیف جج گلگت بلتستان رانا شمیم نے مصدقہ حلف نامے میں کہا تھا کہ اس واقعے کے گواہ تھے جب اُس وقت کے چیف جسٹس پاکستان ثاقب نثار نے ہائی کورٹ کے ایک جج کو حکم دیا تھا کہ 2018 کے عام انتخابات سے قبل نواز شریف اور مریم نواز کو ضمانت پر رہا نہ کیا جائے۔