تازہ ترین
  • بریکنگ :- اسلام آباد:نورمقدم قتل کیس کی سیشن کورٹ میں سماعت
  • بریکنگ :- محمدعمران نہیں،میں نےلیپ ٹاپ اورڈی وی آرقبضےمیں لیا،تفتیشی افسر
  • بریکنگ :- کرائم سین کاافسرعمران وقوعہ پرمیرے بعدپہنچا،تفتیشی افسر
  • بریکنگ :- قتل کی اطلاع ملی تومیں آبپارہ دفتر سےتھانہ کوہسارگیا،تفتیشی افسر
  • بریکنگ :- میں پہنچاتوہمارےملازمین نےظاہرجعفرکوپکڑاہواتھا،تفتیشی افسر

انسانی ہمدردی کی بنیاد پر طالبان حکومت کی مدد کر رہے ہیں: شیخ رشید احمد

Published On 23 November,2021 10:35 pm

اسلام آباد: (دنیا نیوز) وفاقی وزیر داخلہ شیخ رشید احمد نے کہا ہے کہ پاکستان انسانی ہمدردی کی بنیادوں پر طالبان حکومت کی مدد کر رہا ہے، دنیا کو طالبان حکومت کو وقت دینا چاہیے۔ افغانستان کے حالات چند دنوں میں تبدیل نہیں ہوسکتے۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے آٹھویں نیشنل ورکشاپ بلوچستان کے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ ورکشاپ کے شرکاء نے وزیر داخلہ سے سوالات بھی کئے، شرکاء نے شیخ رشید سے بڑے بھائی کی وفات پر تعزیت کی۔ ایصال ثواب کے لئے دعا بھی کی۔

وزیر داخلہ نے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ بلوچستان پاکستان کی ترقی کا راستہ ہے۔ صوبے میں سرمایہ کاری کے بے پناہ مواقع ہیں، گوادر دنیا کی بہترین گہرے سمندر کی بندر گاہ ہے جو بلوچستان کا نقشہ تبدیل کر دے گی، امن امان کے حوالے سے مجموعی طور پر ملک میں امن ہے۔ بلوچستان میں جغرافیہ کے حوالے سے امن وامان بڑا چیلنج ہے، سرمایہ کارصرف امن وامان کو دیکھتا ہے۔ ہم نے ساز گار ماحول پیدا کیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان نے افغانستان میں پائیدار امن کے لئے ایک کلیدی کردار ادا کیا ہے، ہم نے تقریباً ایک لاکھ افغان شہریوں کوافغانستان سے نکلنے میں مدد دی، پاکستان انسانی ہمدردی کی بنیادوں پر طالبان حکومت کی مدد کر رہا ہے، دنیا کو طالبان حکومت کو وقت دینا چاہیے۔ افغانستان کے حالات چند دنوں میں تبدیل نہیں ہوسکتے۔

شیخ رشید احمد نے کہا کہ معاملات مذاکرات سے حل ہونے چاہئیں۔ امن و امان کے لئے ہم نے 80 ہزار جانوں کی قربانی دی، دہشت گردی کی جنگ میں 150 ارب ڈالر کا معاشی نقصان اٹھایا، افغان مہاجرین کی واپسی کا زیادہ انحصار افغانستان کی معاشی حالات کی بہتری پر ہے، 40 لاکھ افغان مہاجرین کی چار دہائیوں سے دیکھ بھال کر رہے ہیں، بلوچستان حکومت کو امن اومان کے لئے ضروری وسائل اور تکنیکی معاونت فراہم کر رہے ہیں۔