تازہ ترین
  • بریکنگ :- سابق حکومت ساڑھے 3سال کیا کرتی رہی سولرانرجی پرتوجہ نہیں دی،وزیراعظم
  • بریکنگ :- گرین انرجی پرتوجہ دینا ہوگی،وزیراعظم شہبازشریف
  • بریکنگ :- گرین انرجی سے ملک کو 20ارب ڈالرکی بچت ہوگی،وزیراعظم
  • بریکنگ :- ہمیں سولراورونڈ انرجی پرتیزی سےآگےبڑھناہوگا،وزیراعظم
  • بریکنگ :- وزیراعظم کاسولرٹیکنالوجی پر17 فیصد ٹیکس ختم کرنے کا اعلان
  • بریکنگ :- آپ نے اعلان کردیا توٹیکس ختم ہوگیا، وزیرخزانہ مفتاح اسماعیل کاجواب
  • بریکنگ :- دنیا میں تیل کی قیمتیں بلندترین سطح پرہیں،وزیراعظم شہبازشریف
  • بریکنگ :- پاکستان سالانہ 20ارب ڈالرتیل وگیس پرخرچ کرنےکامتحمل نہیں ہوسکتا،وزیراعظم

یوٹیوب کا کورونا ویکسین کے خلاف جعلی مواد کو بلاک کرنے کا اعلان

Published On 30 September,2021 06:39 pm

لاہور: (ویب ڈیسک) انٹرنیٹ کی سب سے مقبول ویڈیو شیئرنگ اور اسٹریمنگ ویب سائٹ یوٹیوب نے کورونا ویکسین کے خلاف جعلی مواد کو بلاک کرنے کا اعلان کردیا۔

واضح رہے کہ اس سے قبل گزشتہ ماہ یوٹیوب نے کورونا وبا کے دوران غلط اور خطرناک معلومات فراہم کرنے والی 10 لاکھ سے زائد ویڈیوز ڈیلیٹ کی تھیں۔

برطانوی خبر رساں ادارے رائٹرز کی رپورٹ کے مطابق یوٹیوب نے اعلان کیا کہ کورونا ویکسین کے صحت پر منفی اثرات یا ویکسین کے بارے میں غلط معلومات فراہم کرنے والے مواد کو بلاک کردیا جائے گا۔ یوٹیوب ویکسین کے خلاف سرگرم افراد پر بھی پابندی عائد کر رہے ہیں اور اس حوالے سے کئی چینلز کو بھی ختم کیا جارہا ہے۔

رائٹرز کے مطابق یہ اقدام اس وقت سامنے آیا ہے جب یوٹیوب اور دیگر کمپنیوں بشمول فیس بک اور ٹوئٹرکو تنقید کا نشانہ بنایا جا رہا ہے کہ وہ صحت سے متعلق غلط معلومات کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے کام نہیں کر رہے ہیں۔

یوٹیوب نے روس کے  رشین ٹوڈے  کے جرمن لینگویج چینلز کو اس لیے ڈیلیٹ کردیا کیونکہ چینلز نے یوٹیوب کی کورونا کے حوالے سے غلط معلومات کی پالیسی کی خلاف ورزی کی۔

روس نے یوٹیوب کے روز اس اقدام کو جارحیت قرار دیا اور یوٹیوب کو بلاک کرنے کی دھمکی دی ہے۔