تازہ ترین
  • بریکنگ :- کوئٹہ اورلسبیلہ کےعلاوہ بلوچستان کے 32اضلاع میں بلدیاتی الیکشن
  • بریکنگ :- بلدیاتی انتخابات کےلیےبیلٹ پیپرزاورانتخابی میٹریل کی ترسیل کاعمل مکمل
  • بریکنگ :- پولنگ صبح 8بجےسےشام 5بجےتک بغیرکسی وقفےکےجاری رہےگی
  • بریکنگ :- کوئٹہ:7 میونسپل کارپوریشن،838یونین کونسلزمیں پولنگ ہوگی
  • بریکنگ :- کوئٹہ:5ہزار345دیہی وارڈاور9ہزار14شہری وارڈکےلیےپولنگ ہوگی
  • بریکنگ :- کوئٹہ:35لاکھ52ہزار298ووٹرز اپنا حق رائے دہی استعمال کریں گے
  • بریکنگ :- کوئٹہ:20لاکھ 6ہزار274مرداور15لاکھ46ہزار124خواتین ووٹرزہیں
  • بریکنگ :- کوئٹہ:32اضلاع میں 5ہزار226پولنگ اسٹیشنزقائم
  • بریکنگ :- کوئٹہ:2ہزار54پولنگ اسٹیشنزانتہائی حساس،ایک ہزار974حساس قرار
  • بریکنگ :- الیکشن میں16 ہزار195امیدوارمدمقابل،102 امیدواربلامقابلہ منتخب
  • بریکنگ :- کوئٹہ:پولنگ اسٹیشنزپرپولیس،لیویزاورایف سی کےجوان تعینات ہوں گے

بلوچستان حکومت نے ہیلتھ کارڈ کی مد میں بجٹ میں 6 ارب روپے مخصوص کر دیئے

Published On 04 July,2021 01:01 pm

کوئٹہ: (دنیا نیوز) بلوچستان حکومت نے غریب عوام کے مفت علاج کیلئے اقدامات شروع کر دیئے، بجٹ میں ہیلتھ کارڈ کی مد میں 6 ارب روپے رکھے گئے ہیں۔

بلوچستان کے آئندہ مالی سال کے بجٹ میں عوام کو علاج معالجے کی مفت سروس فراہم کرنے کے لیے ہیلتھ کارڈ کا اجراء کیا جا رہا ہے جس کے ذریعے بلوچستان کے 18 لاکھ خاندانوں کو صحت کی سہولیات میسر آسکیں گی۔

ہیلتھ کارڈ کے ذریعے صوبے کے کسی بھی سرکاری یا پرائیویٹ ہسپتال میں علاج کی سہولت حاصل کی جا سکے گی، شہریوں نے بھی حکومت کے ہیلتھ کارڈ پروگرام کو سراہا۔

صوبائی حکومت کی جانب سے بلوچستان کے عوام کو سات خطرناک بیماریوں کے علاج کے لیے خصوصی پروگرام بھی شروع کیا گیا ہے جس کے ذریعے ان بیماریوں کے علاج کے لیے حکومت ایک کروڑ روپے تک مالی امداد فراہم کرے گی۔