تازہ ترین
  • بریکنگ :- پارلیمنٹ کوکمزورکرناجمہوریت کوکمزورکرنےکےمترادف ہے،فوادچودھری
  • بریکنگ :- کراچی:سندھ میں اگلی حکومت پی ٹی آئی کی ہوگی،فوادچودھری
  • بریکنگ :- ان کےدن بھی تھوڑےہیں،آخری الیکشن تھاجوانہوں نےلڑلیا،فوادچودھری
  • بریکنگ :- اپوزیشن کےپاس کوئی ایجنڈانہیں،وزیراطلاعات فوادچوھری
  • بریکنگ :- ارسانےعملی اقدام شروع کیےتومرادعلی شاہ جوتےچھوڑکربھاگ گئے،فواد چودھری
  • بریکنگ :- پانی خودچوری کررہےہیں،الزام وفاق،پنجاب پرلگایاجارہاہے،فوادچودھری
  • بریکنگ :- وفاق اورپنجاب میں(ن)لیگ نے 30 سال حکومت کی،فوادچودھری
  • بریکنگ :- پیپلزپارٹی نےہمیشہ جمہوریت کیخلاف اقدامات کیے،فوادچودھری
  • بریکنگ :- جوپیسہ سندھ کےحوالےکرتےہیں وہ دبئی سےبرآمدہوتاہے،فوادچودھری
  • بریکنگ :- اپوزیشن انتخابی اصلاحات کیلئےپارلیمنٹ میں آکرتجاویزدے،فوادچودھری
  • بریکنگ :- چاہتےہیں کہ پارلیمان کومضبوط بنادیں،وزیراطلاعات فوادچودھری
  • بریکنگ :- فضل الرحمان جیسےلوگ چاہتےہیں کہ سسٹم نہ چلے،فوادچودھری
  • بریکنگ :- شہبازشریف کبھی مولانا،کبھی بلاول کاکندھااستعمال کررہےہیں،فوادچودھری
  • بریکنگ :- شہبازشریف کےپاس(ن)لیگ کاکنٹرول نہیں ہے،فوادچودھری
  • بریکنگ :- شہبازشریف اپنےفیصلےکرنےمیں آزادنظرنہیں آتے،فوادچودھری
  • بریکنگ :- سندھ کےسب سےبڑےدشمن سندھ پرراج کررہےہیں،فوادچودھری
  • بریکنگ :- یہ ضروری ہےکہ جوپیسہ سندھ کودیں اس کی مانیٹرنگ کی جائے،فوادچودھری
  • بریکنگ :- زرداری،فریال تالپور،مرادعلی شاہ کی زمینوں کاپانی چوری کیوں نہیں ہوتا؟فوادچودھری

اسلام آباد: تعلیمی اداروں کی بندش کے خلاف پرائیوٹ سکولز ایسوسی ایشن کا احتجاج

Published On 08 April,2021 08:39 pm

اسلام آباد: (دنیا نیوز) کورونا وائرس کے پیش نظر تعلیمی اداروں کی بندش کے خلاف پرائیوٹ سکولز ایسوسی ایشن کے طلبہ اور اساتذہ نے ڈی چوک پر پورا دن احتجاج جاری رکھا تاہم انتظامیہ سے مذاکرات کے بعد دھرنے کو ختم کر دیا گیا۔

تفصیل کے مطابق سکولوں کی بندش کے خلاف نجی تعلیمی اداروں کی خواتین اور مرد اساتذہ نے احتجاجی مظاہرہ کیا، ڈی چوک تک ریلی نکالی اور پھر دھرنا دے کر بیٹھ گئے۔ احتجاج میں بڑی تعداد میں طلبہ بھی شامل تھے۔

مظاہرین نے مطالبہ کیا کہ نیشنل کمانڈ آپریشن سینٹر (این سی او سی) کے اجلاس میں نجی تعلیمی اداروں کے موقف کو بھی سامنے رکھا جائے۔ اساتذہ کا کہنا تھا کہ سکولوں کی بندش سے سینکڑوں ٹیچرز کے بے روزگار ہونے کا خدشہ ہے، چنانچہ کورونا ایس او پیز پر مکمل عمل کرنے والے سکولوں میں تعلیمی عمل جاری رکھنے دیا جائے۔

پورے دن کے دھرنا کے بعد آخرکار مظاہرین نے انتظامیہ سے مذاکرات کئے اور دھرنے کو ختم کر دیا گیا۔ مذاکرات میں انتظامیہ نے مظاہرین کو یقین دلایا کہ پیر کے روز ان کے تمام مطالبات کو این سی او سی کے سامنے رکھا جائے گا۔