تازہ ترین
  • بریکنگ :- پہلے 10 ماہ ترسیلات زر 7.6 فیصداضافےسے 26.1 ارب ڈالرریکارڈ
  • بریکنگ :- برآمدات 27.8 فیصداضافےسے 26.9 ارب ڈالرکی سطح تک پہنچ گئیں
  • بریکنگ :- درآمدات 39 فیصداضافےسے 59.8 ارب ڈالرکی سطح تک پہنچ گئیں
  • بریکنگ :- کرنٹ اکاؤنٹ خسارےمیں 13.8 ارب ڈالرکااضافہ ریکارڈ
  • بریکنگ :- براہ راست غیرملکی سرمایہ کاری 1.6 فیصدکمی سے 1.45 ارب ڈالررہی
  • بریکنگ :- زرمبادلہ ذخائرمئی کےتیسرےہفتے تک 16.108 ارب ڈالررہے،رپورٹ
  • بریکنگ :- اسٹیٹ بینک 10 ارب 2 کروڑڈالر،کمرشل بینکوں کےذخائر 6.08 ارب ڈالررہے،رپورٹ
  • بریکنگ :- ڈالرکی شرح تبادلہ 201.92 روپےفی ڈالرکی سطح پرپہنچ گئی،رپورٹ
  • بریکنگ :- 9ماہ میں ٹیکس ریونیو 28.5 فیصداضافےسے 4855 ارب روپےرہا،رپورٹ
  • بریکنگ :- جولائی تامارچ نان ٹیکس آمدنی 15.7 فیصدکمی سے 983 ارب رہی،وزارت خزانہ
  • بریکنگ :- جولائی تااپریل پی ایس ڈی پی کی مدمیں 603 ارب روپےمنظورکیےگئے
  • بریکنگ :- جولائی تامارچ مالیاتی خسارہ بڑھ کر 2566 ارب کی سطح تک پہنچ گیا، رپورٹ
  • بریکنگ :- اپریل میں مہنگائی کی شرح 13.4 فیصدریکارڈ ،رپورٹ
  • بریکنگ :- پہلے 10 ماہ میں مہنگائی کی شرح 11 فیصدریکارڈکی گئی،رپورٹ
  • بریکنگ :- وزارت خزانہ کی ملکی معیشت پرماہانہ آؤٹ لک رپورٹ جاری

پاکستان امن کیساتھ کھڑا ہے،خطوں میں پل کا کردارادا کرنےکیلئےتیارہیں:آرمی چیف

Published On 30 June,2021 10:47 pm

راولپنڈی: (دنیا نیوز) آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے کہا ہے کہ پاکستان امن کے ساتھ کھڑا ہے اور مختلف خطوں میں پل کا کردار ادا کرنے کیلئے تیار ہے۔

آرمی چیف نے یہ بات نیشنل ڈیفنس یونیورسٹی کے دورے کے موقع پر 21ویں نیشنل سیکیورٹی اور وار کورس کے شرکا سے خطاب کرتے ہوئے کہی۔ آئی ایس پی آر کے مطابق انہوں نے اپنے خطاب میں خطے کی بدلتی صورتحال پر روشنی ڈالتے ہوئے کہا کہ حقیقی اور مستقبل کی ضروریات کو مدنظر رکھ کر تربیت کا حصول آپریشنل تیاریوں کا لازمی حصہ ہے۔ دشمن پر برتری کے لیے فوج کی جدید خطوط پر تربیت اور نئی ٹیکنالوجیز کا استعمال انتہائی اہمیت رکھتا ہے۔

آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کا کہنا تھا کہ پاکستان امن کےساتھ کھڑا ہے۔ افغان امن تباہ کرنیوالے خطے کو غیر مستحکم کرنا چاہتے ہیں۔ پاکستان خطوں کے درمیان پل کا کردار ادا کرنے کیلئے تیار ہے۔

جنرل قمر جاوید باجوہ نے اپنے خطاب میں مقبوضہ کشمیر کے عوام کی بھرپور حمایت کا اعادہ کرتے ہوئے مسئلہ کشمیر کے پرامن اور دیرپا حل پر زور دیا، ان کا کہنا تھا کہ اسے اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق حل ہونا چاہیے۔