تازہ ترین
  • بریکنگ :- کوئٹہ اورلسبیلہ کےعلاوہ بلوچستان کے 32اضلاع میں بلدیاتی الیکشن
  • بریکنگ :- پولنگ 8بجےسےشام 5بجےتک بغیرکسی وقفےکےجاری رہےگی
  • بریکنگ :- کوئٹہ:7 میونسپل کارپوریشن،838یونین کونسلزمیں پولنگ ہوگی
  • بریکنگ :- کوئٹہ:5ہزار345دیہی وارڈاور9ہزار14شہری وارڈکےلیےپولنگ ہوگی
  • بریکنگ :- کوئٹہ:35لاکھ52ہزار298ووٹرز اپنا حق رائے دہی استعمال کریں گے
  • بریکنگ :- کوئٹہ:20لاکھ 6ہزار274مرداور15لاکھ46ہزار124خواتین ووٹرزہیں
  • بریکنگ :- کوئٹہ:32اضلاع میں 5ہزار226پولنگ اسٹیشنزقائم
  • بریکنگ :- کوئٹہ:2ہزار54پولنگ اسٹیشنزانتہائی حساس،ایک ہزار974حساس قرار
  • بریکنگ :- الیکشن میں16 ہزار195امیدوارمدمقابل،102 امیدواربلامقابلہ منتخب
  • بریکنگ :- کوئٹہ:پولنگ اسٹیشنزپرپولیس،لیویزاورایف سی کےجوان تعینات

خوشاب کا ایسا گاؤں جہاں مکین آج بھی بارشوں کا پانی پینے پر مجبور

Published On 15 October,2021 11:37 pm

خوشاب:(دنیا نیوز)پنجاب کے ضلع خوشاب میں پانچ ہزارسے زائد آبادی والے گاؤں مہوڑیانوالہ کے مکین آج کے دور میں بھی بارشوں کا پانی پینے پر مجبور ہیں۔

پنجاب میں ایک ضلع ایسا بھی ہے جہاں پر مضر صحت پانی کے حصول کیلئے بھی خواتین کو لمبا سفر طے کرنا پڑتا ہے اور یہ ضلع کوئی اور نہیں بلکہ خوشاب ہے۔

قدیم اور خوبصورت وادی سون قدرتی مناظر کے باعث دنیا بھر میں مشہور ہے،لیکن اس وادی کا دور افتادہ گاؤں مہوڑیانوالہ آج کے جدید دور میں بھی پینے کے صاف پانی جیسی بنیادی سہولت سے محروم ہے،پانچ ہزار سے زائد آبادی پر مشتمل گاؤں کے مکین بارش کاجمع کیا ہوا پانی پینے پر مجبور ہیں۔

مہوڑیانوالہ گاؤں کے باہر تالابوں میں جمع ہونےوالا پانی نہ صرف انسانوں بلکہ جانوروں کی پیاس بھی بجھاتا ہے جبکہ خواتین کو صاف پانی کیلئے دور دراز کا سفر طے کرنا پڑتا ہے۔

مکینوں کو شکوہ ہے کہ منتخب نمائندے ووٹ لینے کے وقت تو بڑے دعوے کرتے ہیں لیکن اس کے بعد مسائل کا حل تو درکنار علاقے کا رخ کرنے کی زحمت بھی نہیں گوارا نہیں کرتے۔