امریکا نے چین کے مشتبہ غبارے کو سمندر میں مار گرایا

Published On 05 February,2023 08:38 am

واشنگٹن : (ویب ڈیسک ) امریکا نے چین کے مشتبہ جاسوس غبارے کو مار گرایا ، پینٹاگون نے غبارے کو جنوبی کیرولینا کے ساحل پر نشانہ بنانے کی تصدیق کی ہے۔

غیرملکی میڈیا رپورٹس کے مطابق پینٹاگون کا کہنا ہے کہ جاسوس غبارہ چین کی ناقابل قبول خلاف ورزی ہے، امریکی صدر بائیڈن نے غبارہ مار گرانے پر امریکی فوج کو مبارکباد دی ہے۔

اس حوالےسے امریکی وزیر دفاع کاکہنا ہے کہ دانستہ اور قانون کے مطابق کی گئی یہ کارروائی ظاہر کرتی ہے کہ صدر بائیڈن اور ان کی قومی سلامتی کی ٹیم ہمیشہ امریکی عوام کی حفاظت اور سلامتی کو فوقیت دے گی۔

امریکی وزیر دفاع نے مزید کہا کہ چین کی جانب سے ہماری خودمختاری کی ناقابل قبول خلاف ورزی کا مؤثر جواب دیا جائے گا۔

امریکی میڈیا کے مطابق چینی غبارہ چند دنوں سے امریکا کے اوپر پرواز کررہا تھا اوراب واشنگٹن اور بیجنگ کے درمیان کشیدگی کا سبب بن گیا ہے ، ابتداء میں حفاظتی اقدامات کے پیش نظر اسے نشانہ نہیں بنایا گیا تھا۔

یہ بھی پڑھیں :امریکا میں مشتبہ گیس غبارے کی پرواز کا الزام ، چین کا ردعمل آگیا

واضح رہے کہ جمعہ کے روز چین نے غبارے کی ملکیت کا اعتراف کرتے ہوئے کہا تھا کہ یہ موسم کی صورتحال جانچنے والا غبارہ تھا جو اپنے راستے سے بھٹک گیا تھا، چین نے کہا تھا کہ امریکی فضائی حدود میں غبارے کے غیر ارادی داخلے اور صورتحال پر افسوس ہے ، چین کسی بھی ملک کی سرزمین یا فضائی حدود کی خلاف ورزی کا ارادہ نہیں رکھتا۔

رواں ہفتے اس غبارے کے منظرعام پر آنے کے بعد امریکی وزیرخارجہ انٹونی بلنکن کا اتوار کو بیجنگ کا دورہ منسوخ کر دیا تھا ، اس کا مقصد امریکا اور چین کے درمیان کشیدگی کو کم کرناتھا۔

یہ بھی پڑھیں :جاسوسی غبارہ: امریکی وزیر خارجہ نے چین کا دورہ ملتوی کردیا

خیال رہے بیجنگ اور واشنگٹن کے درمیان حال ہی میں تائیوان پر اختلافات اور انسانی حقوق کے میدان میں چین کے ریکارڈ اور بحیرہ جنوبی چین میں اس کی فوجی سرگرمیوں کی روشنی میں کشیدگی میں اضافہ ہوا ہے۔
 

 

Advertisement