تازہ ترین
  • بریکنگ :- کراچی:ساڑھے 3 سال کےدوران قرضوں میں 80فیصداضافہ ہوا،وزیراعظم
  • بریکنگ :- اگرہم اسی طرح رہےتو 500سال بعدبھی حالت نہیں بدلےگی،وزیراعظم
  • بریکنگ :- ہمارےپاس جادوکی چھڑی نہیں کب تک کشکول لےکرپھریں گے؟وزیراعظم
  • بریکنگ :- شاندارمحلات سےقومیں نہیں بنتیں،وزیراعظم شہبازشریف
  • بریکنگ :- اگرہم خوشحال ہوں گے تولوگ سلام کریں گے،وزیراعظم
  • بریکنگ :- اگرمانگ تانگ کرگزارہ کریں گےتولوگ کہیں گےبھکاری جارہاہے،وزیراعظم
  • بریکنگ :- یورپی یونین سےجی ایس پی پلس کےحوالےسےبات چیت جاری ہے،وزیراعظم
  • بریکنگ :- یورپی یونین پرتنقیدکی گئی تووہ ناراض ہوگئے،وزیراعظم
  • بریکنگ :- وزیراعظم کاسولرٹیکنالوجی پر17 فیصد ٹیکس ختم کرنے کا اعلان
  • بریکنگ :- آپ نے اعلان کردیا توٹیکس ختم ہوگیا، وزیرخزانہ مفتاح اسماعیل کاجواب
  • بریکنگ :- دنیا میں تیل کی قیمتیں بلندترین سطح پرہیں،وزیراعظم شہبازشریف
  • بریکنگ :- پاکستان سالانہ 20ارب ڈالرتیل وگیس پرخرچ کرنےکامتحمل نہیں ہوسکتا،وزیراعظم
  • بریکنگ :- لاڈلی حکومت کومقتدرادارےنےمثالی سپورٹ دی،وزیراعظم
  • بریکنگ :- ہمیں ایسی 30فیصدسپورٹ ملتی توملک راکٹ کی طرح اوپرجارہاہوتا،وزیراعظم
  • بریکنگ :- ہمارے دور میں بجلی کے منصوبے لگائے گئے،وزیراعظم
  • بریکنگ :- ہم نےسستے ترین بجلی کے منصوبے لگائے،وزیراعظم
  • بریکنگ :- جب لوڈشیڈنگ ختم ہوگئی تودوبارہ کیوں ہورہی ہے،وزیراعظم
  • بریکنگ :- روپےکی قدرتیزی سے کم ہورہی ہے ،وزیراعظم
  • بریکنگ :- اربوں روپے خرچ کرکے چینی ایکسپورٹ کی گئی،وزیراعظم
  • بریکنگ :- جب ایل این جی سستی تھی تو درآمد نہیں کی گئی ،وزیراعظم
  • بریکنگ :- اگرمل کرمحنت کریں گےتو 5سے 10سال میں ملکی تقدیربدل جائےگی،وزیراعظم
  • بریکنگ :- کیاہماری تقدیرمیں لکھاہےکہ غریب اوربھکاری رہیں؟وزیراعظم
  • بریکنگ :- ساڑھے 3 سال میں معیشت کا بیڑہ غرق ہوا،وزیراعظم
  • بریکنگ :- دن رات محنت کریں گے توملک ترقی کرےگا،وزیراعظم
  • بریکنگ :- پاکستان آئی ٹی کی ایکسپورٹ 15ارب ڈالرکرسکتاہے،وزیراعظم
  • بریکنگ :- تمام صوبوں میں آئی ٹی ٹاوربننےچاہئیں،وزیراعظم
  • بریکنگ :- کراچی میں پانی کےمسئلےکےحل کیلئےسعودی عرب نےایک ارب ڈالرسرمایہ کاری کاتحفہ دیا،وزیراعظم
  • بریکنگ :- پاکستان نے ترقی کرنی ہےتوایکسپورٹ پرتوجہ دیناہوگی،وزیراعظم
  • بریکنگ :- قومیں ایسےنہیں بنتیں کہ بینک سےقرضہ لیااورپھرمعاف کرالیا،وزیراعظم
  • بریکنگ :- قومیں وہی ترقی کرتی ہیں جووقت کی قدرکرتی ہیں،وزیراعظم
  • بریکنگ :- گھریلوصارفین کی گیس بند نہیں کرسکتے ،وزیراعظم
  • بریکنگ :- سابق حکومت ساڑھے 3سال کیا کرتی رہی سولرانرجی پرتوجہ نہیں دی،وزیراعظم
  • بریکنگ :- میثاق معیشت پرمیرامذاق اڑایا گیا،وزیراعظم شہبازشریف
  • بریکنگ :- امریکامیں کوئی بھی حکومت آئےان کی پالیسیاں نہیں بدلتیں،وزیراعظم
  • بریکنگ :- گرین انرجی پرتوجہ دینا ہوگی،وزیراعظم شہبازشریف
  • بریکنگ :- گرین انرجی سے ملک کو 20ارب ڈالرکی بچت ہوگی،وزیراعظم
  • بریکنگ :- ہمیں سولراورونڈ انرجی پرتیزی سےآگےبڑھناہوگا،وزیراعظم
  • بریکنگ :- گندم پہلےایکسپورٹ پھرامپورٹ کرتےہیں کیایہ سیاسی افراتفری کانتیجہ تھا؟وزیراعظم

پاکستانی ڈرامے دیکھ کر مجھے ڈپریشن ہونے لگتا ہے: ثمینہ علوی

Published On 16 October,2020 06:20 pm

لاہور: (ویب ڈیسک) صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی کی اہلیہ ثمینہ علوی کا کہنا ہے کہ پاکستانی ڈراموں میں کوئی ڈھنگ کی بات نہیں ہوتی، دیکھ کر مجھے ڈپریشن ہونے لگتا ہے۔

ان خیالات کا اظہار صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی کی اہلیہ ثمینہ علوی نے برطانوی خبر رساں ادارے’دی انڈیپینڈنٹ اُردو‘ سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

بیگم ثمینہ عارف علوی سے ایوان صدر میں آمد اور اب تک کے قیام کے بارے میں پوچھا تو ان کا کہنا تھا کہ انہیں یہاں آنا بہت اچھا لگا۔ ایوان صدر تو ایک طرف لیکن میں نے اللہ تعالی کا شکر ادا کیا کہ اس نے ہمیں اتنا بڑا موقع دیا۔ ہم تو سوچ بھی نہیں سکتے تھے کہ یہاں آئیں گے۔ یہ تو ٹرانزیشن ہے یہ ہمارا گھر تو نہیں ہے۔

انٹرویو کے دوران انہوں نے مزید کہا کہ ایوان صدر کی دیکھ بھال کے لیے لوگ تو ہیں لیکن وہ اس میں ذاتی دلچسپی بھی لیتی ہوں۔ میں جب یہاں آئی تو حالات کچھ زیادہ اچھے نہیں تھے۔ دیکھ بھال اچھی نہیں ہوئی تھی۔ یہ جگہ نظرانداز شدہ تھی ۔ تو میں نے مرمت کروائی اور زیادہ ہریالی کا بندوبست کیا۔

ترکی کی مقبول ڈراما سیریز ’ارطغرل‘ کی تعریف صدر اور ان کی بیگم دونوں نے ماضی میں کی تھی۔ ہم نے پوچھا کہ کیا آپ نے ساری سیریز دیکھ لی تو وہ کہتی ہیں تمام نہیں تھوڑی بہت دیکھی ہے اور وہ بھی کورونا لاک ڈاؤن کے دوران دیکھی ہے۔

تاہم انہوں نے بتایا کہ وہ پاکستانی ڈرامے یکساں موضوعات کی وجہ سے بالکل نہیں دیکھتیں۔ پاکستانی ڈرامے سے مجھے ڈپریشن ہونے لگتا ہے۔ کوئی ڈھنگ کی بات نہیں ہوتی۔ ان سے بات کی تو کہتے ہیں دیگر موضوع ریٹنگ نہیں دیتے لیکن میرے خیال میں آپ اچھی چیز بنائیں گے تو لوگ ضرور سراہیں گے۔‘

شہر قائد کے حوالے سے انہوں نے کہا کہ حالت دیکھ کر مجھے کراچی کا بھی غم رہتا ہے تو اکثر میں صدر صاحب سے کہتی ہوں کہ آپ یہ بات کریں ایسا کریں تو ایک مرتبہ انہوں نے کہا میں نہیں جاتا آپ اس اجلاس میں چلی جائیں۔

انٹرویو کے دوران ان کا کہنا تھا کہ جنسی زیادتی کے واقعات پر انہیں بھی شدید تشویش ہے اور کہتی ہیں کہ ماسوائے کسی سخت اقدام کے اس پر شاید قابو نہ پایا جا سکے۔ ’ہمیں کوئی ایسا مضبوط قدم لینا چاہیے جس سے آدمی کو شاک لگے۔‘ تاہم یہ شاک یا دھچکہ کس قسم کا ہو سکتا ہے اس کی انہوں نے وضاحت نہیں کی۔

ایوان صدر سے جاتے وقت انہیں کیسے یاد رکھا جائے، اس کے جواب میں ان کا کہنا تھا کہ ابھی تو کچھ نہیں کیا لیکن آگے چل کر اگر ملک کے لیے کچھ کر سکیں تو یہ بڑی کامیابی ہو گی۔