تازہ ترین
  • بریکنگ :- کوئٹہ اورلسبیلہ کےعلاوہ بلوچستان کے 32اضلاع میں بلدیاتی الیکشن
  • بریکنگ :- پولنگ 8بجےسےشام 5بجےتک بغیرکسی وقفےکےجاری رہےگی
  • بریکنگ :- کوئٹہ:7 میونسپل کارپوریشن،838یونین کونسلزمیں پولنگ ہوگی
  • بریکنگ :- کوئٹہ:35لاکھ52ہزار298ووٹرز اپنا حق رائے دہی استعمال کریں گے
  • بریکنگ :- کوئٹہ:20لاکھ 6ہزار274مرداور15لاکھ46ہزار124خواتین ووٹرزہیں
  • بریکنگ :- کوئٹہ:32اضلاع میں 5ہزار226پولنگ اسٹیشنزقائم
  • بریکنگ :- کوئٹہ:5ہزار345دیہی وارڈاور9ہزار14شہری وارڈکےلیےپولنگ ہوگی
  • بریکنگ :- کوئٹہ:2ہزار54پولنگ اسٹیشنزانتہائی حساس،ایک ہزار974حساس قرار
  • بریکنگ :- الیکشن میں16 ہزار195امیدوارمدمقابل،102 امیدواربلامقابلہ منتخب
  • بریکنگ :- کوئٹہ:پولنگ اسٹیشنزپرپولیس،لیویزاورایف سی کےجوان تعینات

حکومت آئی ایم ایف کو "ایبسلیوٹلی ناٹ" کیوں نہیں کہتی: شیری رحمان

Published On 09 October,2021 04:31 pm

لاہور: (دنیا نیوز) پاکستان پیپلز پارٹی کی سینیٹر شیری رحمان نے کہا ہے کہ حکومت آئی ایم ایف کو "ایبسلیوٹلی ناٹ" کیوں نہیں کہتی ہے۔

نائب صدر پیپلز پارٹی سینیٹر شیری رحمان نے ٹویٹ میں کہا لکھا کہ آئی ایم ایف نے 225 ارب کے اضافی ٹیکس عائد کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔ اب حکومت آئی ایم ایف کو "ایبسلیوٹلی ناٹ" کیوں نہیں کہتی ہے، ‏آئی ایم ایف نے حکومت سے بجلی کی قیمت اور ٹیکسز میں مزید اضافے کا مطالبہ کیا ہے۔

انہوں نے لکھا کہ اس بار وزراء قیمتوں میں اضافہ نہ کرنے کا کوئی دعوی نہیں کر رہے، وزراء عوام کو روٹی کم کھانے کا مشورہ دے رہے ہیں۔