تازہ ترین
  • بریکنگ :- سکردو:وزیراعلیٰ گلگت بلتستان خالدخورشیدکی پریس بریفنگ
  • بریکنگ :- آرٹیکل ون میں شامل ہوئےبغیرگلگت بلتستان بااختیارصوبہ بنےگا،خالدخورشید
  • بریکنگ :- جی بی کیلئےقومی اسمبلی میں چار،سینیٹ میں 8نشستیں مختص ہوں گی،وزیراعلیٰ
  • بریکنگ :- جی بی سےمنتخب قومی اسمبلی ممبروزیراعظم پاکستان بھی بن سکتاہے،خالدخورشید
  • بریکنگ :- عبوری آئینی صوبےکیلئےوفاق کی اپوزیشن جماعتوں سےتعاون کی امیدہے،وزیراعلیٰ
  • بریکنگ :- گلگت بلتستان میں لینڈریفارمزکمیشن بنایاگیاہے،وزیراعلیٰ گلگت بلتستان
  • بریکنگ :- لینڈمافیااورمحکمہ مال کےکرپٹ اہلکاروں کونشان عبرت بنائیں گے،خالدخورشید
  • بریکنگ :- 5 سال میں نیاگلگت بلتستان دےکرجائیں گے،وزیراعلیٰ گلگت بلتستان
  • بریکنگ :- 150 میگاواٹ بجلی کےمنصوبوں پرکام شروع کردیا،وزیراعلیٰ گلگت بلتستان
  • بریکنگ :- ہرضلع کےاسپتالوں میں آئی سی یوبنائیں گے،وزیراعلیٰ خالدخورشید
  • بریکنگ :- سکردو:2میڈیکل کالجزبھی قائم کیےجائیں گے،وزیراعلیٰ گلگت بلتستان

سیاہ فام امریکی لیفٹیننٹ کا متشدد انداز میں گاڑی روکنے پر پولیس اہلکاروں کیخلاف ہرجانے کا دعوی

Published On 12 April,2021 12:33 pm

واشنگٹن: (دنیا نیوز) سیاہ فام امریکی لیفٹیننٹ نے متشدد انداز میں گاڑی روکنے پر دو پولیس اہلکاروں کے خلاف ہر جانے کا دعوی کر دیا۔

ریاست ورجینیا میں پولیس اہلکاروں نے امریکی آرمی کے وردی پہنے لیفٹیننٹ کی گاڑی کو روکا اور ان پر کالی مرچ چھڑکیں۔ فوجی کا کہنا تھا کہ اسے خوف تھا کہ وہ اسے ہلاک کردیں گے۔

دائر مقدمے میں فوجی اہلکارکے آئینی حقوق کی خلاف ورزی، حملہ کرنا، غیر قانونی تلاشی اور نظر بندی کے الزامات شامل ہیں۔ یہ واقعہ ریاست ورجینیا میں گزشتہ برس دسمبر میں پیش آیا تھا۔

واضح رہے کہ امریکی معاشرہ سفید اور سیاہ جسمانی رنگت کے نسلی امتیاز کا شکار ہے، امریکی سیاہ فام شہری جارج فلوئیڈ کی سفید فام پولیس اہلکاروں کے ہاتھوں ہلاکت کے بعد سے امریکہ میں تشدد کا رجحان بڑھتا نظر آ رہا ہے۔