تازہ ترین
  • بریکنگ :- کالعدم تنظیم کااسلام آبادمیں ممکنہ احتجاج
  • بریکنگ :- اسلام آبادپولیس نے حکمت عملی تبدیل کرلی
  • بریکنگ :- مختلف مقامات بندکرنےکیلئے 100سےزائدکنٹینرزاسلام آبادپہنچ گئے
  • بریکنگ :- آئی جی اسلام آبادکی زیرصدارت اعلیٰ سطح اجلاس میں فیصلہ کیاگیا
  • بریکنگ :- اسلام آبادپولیس کامزید داخلی راستوں کوبندکرنےفیصلہ
  • بریکنگ :- کاک پل،کورال،کھنہ،ترامڑی چوک،بارہ کہو کوبندکرنےکافیصلہ
  • بریکنگ :- اسلام آباد:زیروپوائنٹ اوردیگرمقامات کوبھی بندکرنےکافیصلہ
  • بریکنگ :- ریڈزون،ڈپلومیٹک انکلیواورفیض آبادمیں 120سےزائدکنٹینرزلگائےگئےتھے

بلوچستان حکومت 18 لاکھ سے زائد خاندانوں کیلئے ہیلتھ کارڈ جاری کرے گی

Published On 27 August,2021 10:00 am

کوئٹہ: (دنیا نیوز) بلوچستان حکومت صحت کی بہتر سہولیات فراہم کرنے کے لیے 18 لاکھ سے زائد خاندانوں کیلئے ہیلتھ کارڈ کا اجراء کرنے جا رہی ہے جو ملک کے ہسپتالوں میں کارآمد ہوگا۔

بلوچستان حکومت کا صوبے کے غریب خاندانوں کے لیے احسن اقدام، 18 لاکھ 20 ہزار خاندانوں کے لیے صحت کارڈ کا اجراء کیا جا رہا ہے جسکے لیے رواں مالی سال کے بجٹ میں 6 ارب روپے بھی مختص کیے گئے ہیں۔

صوبائی حکومت کی جانب سے دعوی کیا جا رہا ہے کہ دو ماہ میں 18 لاکھ سے زائد خاندانوں میں ہیلتھ کارڈ جاری کر دیا جائے گا جس کے ذریعے نہ صرف بلوچستان بلکہ ملک کے پانچ سو سرکاری و پرائیویٹ ہسپتالوں میں علاج ہو سکے گا۔

بلوچستان کے شناختی کارڈ ہولڈرز ہیلتھ پالیسی سے مستفید ہوسکیں گے اور فی خاندان 10 لاکھ روپے تک علاج معالجے کی سہولت میسر ہو گی، عوام نے بھی حکومتی فیصلے کو سراہا۔

شہریوں کا حکومت وقت سے مطالبہ ہے کہ اگر ہیلتھ کارڈ کے ساتھ صوبے کے سرکاری ہسپتالوں میں طبی سہولیات کی فراہمی کو بہتر بنا دیا جائے تو یہاں کے باسیوں کی مشکلات میں کسی حد تک کمی ہو جائے گی۔